Just Bliss

Posts Tagged ‘Najma Mansoor

Image result for images of girl weeping in bed

Even today on freezing dark January night

My heart feels the frozen memories’ plight

The warmth of thy homely hands;

on my soul is thawing and melting

and from my eyes’ corners flowing

Memories fading and vanishing

The city’s cold and dry ambiance

Gets suddenly soggy and sopping

جنوری کی سرد اَندھیری راتوں میں!

**********************
آج بھی
جنوری کی سرد اندھیری راتوں میں
تیرے نرم گرم ہاتھوں کا لمس
میرا دل محسوس کرتا ہے
تو میری روح پر جمی
یادوں کی برف
پگھل کر
میری آنکھوں کے کناروں سے
بہنے لگتی ہے
یادوں کے نیلے چہرے دھلنے لگتے ہیں
اور شہر کی سرد اور خشک ہوا میں
نمی اچانک بڑھ جاتی ہے!

Advertisements

0e1351a31e9d66395b9f1d7f269b3a09--indian-beauty-native-american

His flute’s cheerless symphony

Is heart piercing melancholy!

 I feel as if flowers forgot to glow

Rivers forgot to flow

Breeze forgot to blow

The evening! Sensed its rhythm

And I; like a pearl in the shell

Remained silent and still

ایک اُداس نظم

اُ س کی اُداس بانسری

دِلوں کے آرپار بجتی ہے

تو مجھے یوں لگتا ہے

جیسے ہوا چلنا،

دریا بہنا، پھول کھلنا

بھول گئے ہوں

اور شام

شام تو اُس کی اُداس دُھن پر

سر دُھنتی رہ گئی ہو

اور میں

میں تو جیسے گھونگھے کے اندر سیپ

اور سیپ کے اندر موتی

ساکت و جامد!

نجمہ منصور

Image result for images of man playing flute

His flute’s cheerless symphony

Is heart piercing melancholy!

I feel as if flowers forgot to glow

Rivers forgot to flow

Breeze forgot to blow

The evening! Sensed its rhythm

And I; like a pearl in the shell

Remained silent and still

ایک اُداس نظم
اُ س کی اُداس بانسری
دِلوں کے آرپار بجتی ہے
تو مجھے یوں لگتا ہے
جیسے ہوا چلنا،
دریا بہنا، پھول کھلنا
بھول گئے ہوں
اور شام
شام تو اُس کی اُداس دُھن پر
سر دُھنتی رہ گئی ہو
اور میں
میں تو جیسے گھونگھے کے اندر سیپ
اور سیپ کے اندر موتی
ساکت و جامد!
نجمہ منصور

Photo provided by www.SheilaSmartPhotography.com.au

Allah is aware of my those prayers,

I’ve never supplicated ever to Him

I put them only in my poetic rosary

I’m sure Allah will be touched

Once I recite my poems to Him

He! The one who’s more benevolent

More loving than seventy mothers;

The Creator, originator, the designer!

He knows even the hearts hush-hush

Allah is conscious of my prayers

He converses in my insightful poetry

خدا میری اُن دُعاؤں کا بھی
رازداں ہے
جو میں نے کبھی نہیں مانگیں
بس نظم کی تسبیح میں پروئی ہیں
اور مجھے کامل یقین ہے کہ
اگر میں وہ نظمیں خدا کو سناؤں تو
اُس کی آنکھیں بھی بھیگ جائیں
وہ خدا
جو ستر ماؤں سے زیادہ مہربان ہے
خالق ہے ، موجد ہے ، صورت گر ہے
اور سینوں کے بھید خوب جانتا ہے
وہی خدا میری دُعاؤں کا رازداں ہے
میر ی نظموں میں بولتا ہے !!
(نجمہ منصور)

 

WHICH SKY DOES GOD LIVE!
Often in news papers
When I see the blood tinges dancing in words
Early in the morning——-can’t resist to ponder
Which sky does God Live?
I ask myself
I ask everyone
A deep silence
Mocks me
But today——
Seeing so many flowers laid in coffins
I realized dripping of blood’s worth —–
Blossoming roses and their dearth
A nightingale’s melancholy chant
A cuckoo’s disheartening chant
I realized then———
Which sky the God lives
Now I don’t ask any one
Which sky does God live

خدا کون سے آسماں پر رہتا ہے!
 
اکثر اخبار میں
صبح سویرے لفظوں کے اندر
چھم چھم ناچتی خون کی بوندیں دیکھ کر
میں سوچ میں پڑ جاتی!
خدا کون سے آسمان پر رہتا ہے
خود سے پوچھتی
سب سے پوچھتی
جواب میں ایک گھنی چُپ
میرا منہ چڑاتی
مگر آج اتنے سارے پھولوں کے جنازے دیکھے تو
میں نے
قطرہ قطرہ ٹپکتے خون کی حقیقت
تازہ گلاب کی حسرت
چڑیا کی اُداسی اور
کوئل کی ہوک میں چھپی درد بُنتی داستاں کو
جان لیا
بس اُس دن سے
میں کسی سے نہیں پوچھتی کہ
خدا کون سے آسماں پر رہتا ہے!
 
(سانحہ پشاور کی یاد میں)

 

 

19203123-english-teacher-sitting-at-the-table-and-smiling-to-the-camera

The Seasons come and the seasons go

But the Season of memories never goes

It has undying settled deep in my heart

I remember I read it somewhere in a book

When you see new faces reflect in old faces

Old memories move with new full of life faces

I believe you are also one of those lost faces

Memory of fine old days, rising as new face

It‘s closer to me now; fading memories!

You know the fine days we spent together

It makes me sad to think of departing you

So keep myself engaged just to forget you

I write poetry and lyrics to keep occupied

I restrain to read, write and lost in books

Thy recollections sting me more in loneliness

And thy remembrance liven up in loneliness

Fragrance of beautiful memories relish me

The fragrance engulfs the ambiance and me

And I continue my life’s journey swiftly ——–

…………………………………………………..

یاد کہانی
موسم آتے جاتے ہیں
مگر یاد کا موسم نہیں گزرتا
عین دِل کے اوپر کہیں ٹھہر جاتا ہے
میں نے کسی کتاب میں پڑھا تھا
جب پُرانی شکلیں نئی شکلوں میں نظر آنے لگیں
تو پرانی یادیں نئے جیون کے ساتھ سفر کرنے لگتی ہیں
مجھے لگتا ہے شاید تم بھی
ایسی ہی کسی یاد کا چہرہ ہوا
سانولی یاد کا
جو میرے قریب آگیا ہے
کہ پرانی یادیں مٹنے لگی ہیں
تم سے جدائی کا موسم مجھے اُداس کرنے لگا ہے
تمہیں معلوم ہے
تمہارے ساتھ بیتے دِن بھلانے کے لیے
میں خود کو مصروف رکھنے کی کوشش کرتی ہوں
نظمیں لکھتی ہوں، شعر کہتی ہوں اور
کتابوں میں اپنا آپ گم کر لیتی ہوں
مگر دل پر ایسی تنہائی گزرتی ہے کہ
یاد کی اگر بتیاں آپ ہی آپ
سُلگ اٹھتی ہیں
جن کی خوشبو میرے چاروں اور پھیل جاتی ہے
دُور دُور تک
اور میں نہ چاہتے ہوئے بھی
اِس دھیمی سی خوشبو کے ساتھ
سفر کرنے لگتی ہوں !!
نجمہ منصور

aps-martyrs-16-dec-2014

in memory of Army Public School’s students and teachers brutally martyred two years back on 16th December

WHICH SKY DOES GOD LIVE!
Often in news papers
When I see the blood tinges dancing in words
Early in the morning——-can’t resist to ponder
Which sky does God Live?
I ask myself
I ask everyone
A deep silence
Mocks me
But today——
Seeing so many flowers laid in coffins
I realized dripping of blood’s worth —–
Blossoming roses and their dearth
A nightingale’s melancholy chant
A cuckoo’s disheartening chant
I realized then———
Which sky the God lives
Now I don’t ask any one
Which sky does God live

 


Enter your email address to follow this blog and receive notifications of new posts by email.

Join 922 other followers

Archives

Archives

April 2018
M T W T F S S
« Mar    
 1
2345678
9101112131415
16171819202122
23242526272829
30  

Shine On Award

Dragon’s Loyalty Award

Candle Lighter Award

Versatile Blogger Award

Awesome Blog Content Award

Inner Peace Award

Inner Peace Award

Inner Peace Award

Flag Counter

Flag Counter

It looks like the WordPress site URL is incorrectly configured. Please check it in your widget settings.

Bliss

blessings for all

Upcoming Events

No upcoming events

Advertisements